تازہ ترینٹیکنالوجی

چند پہاڑوں میں تلف کرنے والی آپس میں

ثابت کی ایک ہولناک مسئلہ بن چکا ہے۔ تاہم یہ اچھی خبر ہے کہ یہ ایک خاص اینزائم (خامرے) کو ازخود گھلانے سے تیز رفتاری سے وضع کیا گیا ہے۔ اس طرح بجلی کے گھلنے میں عشرے، سال اور مہینے نہیں لگتے بلکہ یہ عمل 24 گھنٹے میں بھی مکمل۔ تیز رفتاری سے چلنے کے طریقے اسے بنانے والی ٹیم نے کہا ہے کہ عام ٹیم برسوں تک ماحول میں موجود ہے۔

وہ مزید بار ٹک میں تقسیم شدہ جانور کے جسموں اور بچوں میں شامل ہیں۔ تجرباتی طور پر عام طور پر پلیٹ فارم یعنی پالیمر پولی ایتھائل ٹیرفتھلیٹ (پی ای ٹی) کو صرف ایک ہفتے میں اجزا میں توڑ دیا گیا اور دوسرے تجربے میں صرف 24 گھنٹے میں یہ کام مکمل ہوا۔ آسٹن میں واقع جامعہ ٹیکساس سے دعا کیمیکل انجینیئر ہیل ایلپراور ان کے ساتھیوں نے ایک خامرہ یا انزائم بنایا ہے فاسٹ پیٹ ایز کا نام۔

یہ خامرہ کی بیکٹیریا کی مدد سے سسٹم کو باریک اجزا میں توڑتا مشین لرننگ یا مصنوعی ذانت کی بدولت ماہر نے پانچ بہترین بیکٹیریا کی شناخت کی ہے جو اس کام کو آسان بناتی ہے۔ اگلے مرحلے فاسٹ پیٹ ایز کو مختلف انتخاب کے 51 پر آزمایا۔ اس میں پانی کی عام بوتلیں اور پولس ایسٹر بھی شامل ہیں۔

حیرت انگیز طور پر انجینیئرڈ خامرے کے طور پر تمام آلات پر اثر ڈالا اور اس کے لیے زیادہ درجہ حرارت کی بھی ضرورت نہ پڑی یعنی کل 50 درجے سینٹی کام میں ہی بہترین کارکردگی سامنے آئی۔ یہاں تک کہ 24 گھنٹے میں بھی بعض قسم کی بجلی کی آسانی سے عام اجزا میں تقسیم ختم ہونے میں عمانی طور پر اپنے آپ کو سال لگاتے ہیں۔

setTimeout(function()
!function(f,b,e,v,n,t,s)
if(f.fbq)return;n=f.fbq=function()n.callMethod?
n.callMethod.apply(n,arguments):n.queue.push(arguments);
if(!f._fbq)f._fbq=n;n.push=n;n.loaded=!0;n.version=’2.0′;
n.queue=[];t=b.createElement(e);t.async=!0;
t.src=v;s=b.getElementsByTagName(e)[0];
s.parentNode.insertBefore(t,s)(window,document,’script’,
‘https://connect.facebook.net/en_US/fbevents.js’);
fbq(‘init’, ‘836181349842357’);
fbq(‘track’, ‘PageView’);
, 6000);

/*setTimeout(function()
(function (d, s, id)
var js, fjs = d.getElementsByTagName(s)[0];
if (d.getElementById(id)) return;
js = d.createElement(s);
js.id = id;
js.src = "//connect.facebook.net/en_US/sdk.js#xfbml=1&version=v2.11&appId=580305968816694”;
fjs.parentNode.insertBefore(js, fjs);
(document, ‘script’, ‘facebook-jssdk’));
, 4000);*/


Source link

Related Articles

Back to top button