تازہ ترینٹیکنالوجی

اپنی جسامت سے 100 گنا بلند کرنے والا روبوٹ

ماہرین متعدد کاموں کے لیے کئی روبوٹس تیار کرچکے ہیں، ایک ایسا روبوٹ تیار کیا گیا ہے جو اپنی شناخت سے 100 گنا بڑھ سکتا ہے اور یہ نہ صرف زمین بلکہ چاند کی سطح پر بھی تحقیق میں ہماری مدد ہے۔ اسے کیلی فورنیا میں قائم یونیورسٹی سانٹا بار برا کے ماہرین نے تیار کیا ہے۔ چاند اور مریخ کی سطح پر جابجا ہوتی ہے اور پہیوں والے روبوٹ کی وجہ سے انہیں عبور کرنے میں بہت وقت صرف ہوتا ہے۔

توقع ہے کہ اس طرح روبوٹ چاند پر ایک ہی وقت میں نصف کلومیٹر کا فاصلہ فیصلہ ہوگا، کیوں کہ روبوٹ کو کاربن سادہ اسپرنگ پر ایک ڈھانچے پر رکھا گیا۔ یونیورسٹی آف کیلیفورنیا کے ڈاکٹرائلئٹ ہیکس اور ان کے ساتھیوں نے جو روبوٹ بنایا ہے وہ اسی طرح توانائی کو استعمال کرتا ہے جس طرح ہم اپنے جمع شدہ توانائی کو استعمال کرتے ہوئے آگے بڑھتے ہیں یا پھر ٹانگوں پر اچھلتے ہیں۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ یہ روبوٹ بار بار اپنے اسپرنگ کو گھماکرمخفی توانائی بھرتا ہے جو مکمل طور پر جاری ہے۔ تجرباتی روبوٹ کا کل وزن 30 گرام ہے اور اس میں اس کی طاقت اور اسپرنگ ایک چھوٹی موٹر کی بدولت گھومتے رہتے ہیں اور ان میں توانائی جمع ہوتی ہے۔ اس کے بعد جب فوری طور پر ریلیز ہوتی ہے تو روبوٹ آسمان کی طرف سیدھی سیدھی لگ جاتی ہے۔ اپنے مخصوص نظام کی بدولت یہ روبوٹ زمین پر آکر ازخود سیدھا پر ہے۔

خاص چاند کے لیے بہت کارآمد ثابت قدم۔ چاند پر ثقلی قوت زمین کے مقابلے میں چھٹے کے برابر رہ جاتی ہے۔ اس طرح روبوٹ 125 میٹر بلند جست لگا کر اپنی اصل جگہ سے نصف کلومیٹر دور پہنچ سکتا ہے۔ اس خاصیت کی بنا پر یہ چاند پر ایک شاندار انداز میں بن سکتا ہے، کیوں کہ اگر آپ زمین پر دو فٹ اونچا اچھل کر سکتے ہیں تو چاند پر یہ فاصلہ 12 فٹ تک پہنچ سکتا ہے۔ اس طرح روبوٹ چاند کی گھاٹیاں اور چڑھائیاں آسانی سے عبور کرسکتا ہے جب کہ عام روبوٹ یہ کام نہیں کرتا۔ ماہرین نے اسے چاند کی تسخیر کے لیے ایک بہترین قرار دیا ہے۔

setTimeout(function()
!function(f,b,e,v,n,t,s)
if(f.fbq)return;n=f.fbq=function()n.callMethod?
n.callMethod.apply(n,arguments):n.queue.push(arguments);
if(!f._fbq)f._fbq=n;n.push=n;n.loaded=!0;n.version=’2.0′;
n.queue=[];t=b.createElement(e);t.async=!0;
t.src=v;s=b.getElementsByTagName(e)[0];
s.parentNode.insertBefore(t,s)(window,document,’script’,
‘https://connect.facebook.net/en_US/fbevents.js’);
fbq(‘init’, ‘836181349842357’);
fbq(‘track’, ‘PageView’);
, 6000);

/*setTimeout(function()
(function (d, s, id)
var js, fjs = d.getElementsByTagName(s)[0];
if (d.getElementById(id)) return;
js = d.createElement(s);
js.id = id;
js.src = "//connect.facebook.net/en_US/sdk.js#xfbml=1&version=v2.11&appId=580305968816694”;
fjs.parentNode.insertBefore(js, fjs);
(document, ‘script’, ‘facebook-jssdk’));
, 4000);*/


Source link

Related Articles

Back to top button